سنن ابنِ ماجہ - جنازوں کا بیان - 1434
حدیث نمبر: 1434
حَدَّثَنَا أَبُو بِشْرٍ بَكْرُ بْنُ خَلَفٍ، ‏‏‏‏‏‏ وَمُحَمَّدُ بْنُ بَشَّارٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَا:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ سَعِيدٍ، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنَا عَبْدُ الْحَمِيدِ بْنُ جَعْفَرٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ أَبِيهِ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ حَكِيمِ بْنِ أَفْلَحَ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ أَبِي مَسْعُودٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنِ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ:‏‏‏‏ لِلْمُسْلِمِ عَلَى الْمُسْلِمِ أَرْبَعُ خِلَالٍ:‏‏‏‏ يُشَمِّتُهُ إِذَا عَطَسَ، ‏‏‏‏‏‏وَيُجِيبُهُ إِذَا دَعَاهُ، ‏‏‏‏‏‏وَيَشْهَدُهُ إِذَا مَاتَ، ‏‏‏‏‏‏وَيَعُودُهُ إِذَا مَرِضَ.
ابومسعود (عقبہ بن عمرو) انصاری (رض) کہتے ہیں کہ نبی اکرم ﷺ نے فرمایا : ایک مسلمان کے دوسرے مسلمان پر چار حقوق ہیں : جب اسے چھینک آئے اور وہ «الحمدلله» کہے تو اس کے جواب میں «يرحمک الله» کہے، جب وہ دعوت دے تو اس کی دعوت کو قبول کرے، جب اس کا انتقال ہوجائے تو اس کے جنازہ میں حاضر ہو، اور جب بیمار ہوجائے تو اس کی عیادت کرے ۔
تخریج دارالدعوہ : تفرد بہ ابن ماجہ، (تحفة الأشراف : ٩٩٧٩، ومصباح الزجاجة : ٥٠٥) ، مسند احمد (٥/٢٧٢) (صحیح )
It was narrated from Abu Mas'ud that the Prophet ﷺ said: "The Muslim has four things due from the Muslim: He should if' answer [by saying Yarhamuk-Allah (may Allah have mercy on you) , to him if he sneezes (and says AI-Hamdulillah); he should accept his invitation if he invites him; he should attend his funeral if he dies; and he should visit him if he falls sick." (Hasan)
Top