سنن الترمذی - مناقب کا بیان - 3804
حدیث نمبر: 3605
حَدَّثَنَا خَلَّادُ بْنُ أَسْلَمَ الْبَغْدَادِيُّ، حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ مُصْعَبٍ، حَدَّثَنَا الْأَوْزَاعِيُّ، عَنْ أَبِي عَمَّارٍ، عَنْ وَاثِلَةَ بْنِ الْأَسْقَعِرَضِيَ اللَّهُ عَنْهُ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ إِنَّ اللَّهَ اصْطَفَى مِنْ وَلَدِ إِبْرَاهِيمَ إِسْمَاعِيل، ‏‏‏‏‏‏وَاصْطَفَى مِنْ وَلَدِ إِسْمَاعِيل بَنِي كِنَانَةَ، ‏‏‏‏‏‏وَاصْطَفَى مِنْ بَنِي كِنَانَةَ قُرَيْشًا، ‏‏‏‏‏‏وَاصْطَفَى مِنْ قُرَيْشٍ بَنِي هَاشِمٍ، ‏‏‏‏‏‏وَاصْطَفَانِي مِنْ بَنِي هَاشِمٍ . قَالَ أَبُو عِيسَى:‏‏‏‏ هَذَا حَسَنٌ صَحِيحٌ.
واثلہ بن اسقع (رض) کہتے ہیں کہ رسول اللہ نے فرمایا : اللہ نے ابراہیم (علیہ السلام) کی اولاد میں سے اسماعیل (علیہ السلام) کا انتخاب فرمایا ١ ؎ اور اسماعیل (علیہ السلام) کی اولاد میں سے بنی کنانہ کا، اور بنی کنانہ میں سے قریش کا، اور قریش میں سے بنی ہاشم کا، اور بنی ہاشم میں سے میرا انتخاب فرمایا ۔
امام ترمذی کہتے ہیں : یہ حدیث حسن صحیح ہے۔
تخریج دارالدعوہ : صحیح مسلم/الفضائل ١ (٢٢٧٦) (تحفة الأشراف : ١١٧٤١) ، مسند احمد (٤/١٠٧) (صحیح) (پہلا فقرہ إن اللہ اصطفی من ولد إبراهيم إسماعيل کے علاوہ بقیہ حدیث صحیح ہے، اس سند میں محمد بن مصعب صدوق کثیر الغلط راوی ہیں، اور آگے آنے والی حدیث میں یہ پہلا فقرہ نہیں ہے، اس لیے یہ ضعیف ہے، الصحیحة ٣٠٢)
وضاحت : ١ ؎ : صحیح مسلم میں اگلی حدیث کی طرح یہ ٹکڑا نہیں ہے ، یہ محم بن مصعب کی روایت سے ہے جو کثیر الغلط ہیں ، اس لیے یہ ضعیف ہے ، معنی کے لحاظ سے بھی یہ ٹکڑا صحیح نہیں ہے ، اس سے دوسرے ان انبیاء کی نسب کی تنقیص لازم آتی ہے ، جو اسحاق (علیہ السلام) کی نسل سے ہیں ، اس کے بعد والے اجزاء میں اس طرح کی کوئی بات نہیں اس حدیث سے نبی کریم محمد بن عبداللہ عبدالمطلب کے سلسلہ نسب کے شروع سے اخیر تک اشرف نسب ہونے پر روشنی پڑتی ہے ، نبی قوم کے اشرف نسب ہی میں مبعوث ہوتا ہے ، تاکہ کسی کے لیے کسی بھی مرحلے میں اس کی اعلیٰ نسبی اس نبی پر ایمان لانے میں رکاوٹ نہ بن سکے ، یہ بھی اللہ کی اپنے بندوں پر ایک طرح کی مہربانی ہی ہے کہ اس کے اپنے وقت کے نبی پر ایمان لانے میں کوئی ادنیٰ سے ادنیٰ سی بات رکاوٹ نہ بن سکے ، «فالحمدللہ الرحمن الرحیم»۔
قال الشيخ الألباني : صحيح دون الاصطفاء الأول، الصحيحة (302) ، ويأتى برقم (3869) ، (3687) // أي في صحيح سنن الترمذي - باختصار السند - برقم (2855 / 1 - 3869) ، ضعيف الجامع الصغير (1553) //
صحيح وضعيف سنن الترمذي الألباني : حديث نمبر 3605
Sayyidina Wathilah ibn Asqa (RA) reported that Allah’s Messenger ﷺ said, ‘Allah chose ismail from the offspring of Ibrahim, and from the progeny of Isma’il, He chose Hanu Kinariab. From Banu Kinanah, He chose the Quraysh, and from the Quraysh, He chose Banu Hashim, and He chose me from Banu Hashim.’ [Ahmed 16984, Muslim 2276]
Top