سنن ابنِ ماجہ - دعاؤں کا بیان - 3831
حدیث نمبر: 3827
حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ وَعَلِيُّ بْنُ مُحَمَّدٍ،‏‏‏‏ قَالَا:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا وَكِيعٌ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا أَبُو الْمَلِيحِ الْمَدَنِيُّ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ سَمِعْتُ أَبَا صَالِحٍ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ مَنْ لَمْ يَدْعُ اللَّهَ سُبْحَانَهُ غَضِبَ عَلَيْهِ.
ابوہریرہ (رض) کہتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا : جو شخص اللہ تعالیٰ سے دعا نہیں کرتا، تو اللہ تعالیٰ اس پر غضب ناک (غصہ) ہوتا ہے ١ ؎۔
تخریج دارالدعوہ : «سنن الترمذی/الدعوات ٢ (٣٣٧٣) ، (تحفة الأشراف : ١٥٤٤١) ، وقد أخرجہ : مسند احمد (٢/٤٤٣، ٤٧٧) (صحیح) (تراجع الألباني : رقم : ١١٣ )
وضاحت : ١ ؎: کیونکہ بندگی کا تقاضا یہ ہے کہ آدمی اپنے مالک سے مانگے، نہ مانگنے سے غرور و تکبر اور بےنیازی ظاہر ہوتی ہے، آدمی کو چاہیے کہ اپنی ہر ضرورت کو اپنے مالک سے مانگے اور جب کوئی تکلیف ہو تو اپنے مالک سے دعا کرے، ہم تو اس کے در کے بھیک مانگنے والے ہیں، رات دن اس سے مانگا ہی کرتے ہیں، اور ذرا سا صدمہ ہوتا ہے تو ہم سے صبر نہیں ہوسکتا اپنے مالک سے اسی وقت دعا کرنے لگتے ہیں ہم تو ہر وقت اس کے محتاج ہیں، اور اس کے در دولت کے فقیر ہیں۔
It was narrated from Abu Hurairah (RA) that the Messenger of Allah( ﷺ saw) said: "Whoever does not call upon Allah, He will be angry with him." (Daif)
Top