سنن ابنِ ماجہ - طب کا بیان - 3441
حدیث نمبر: 3436
حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ وَهِشَامُ ابْنُ عَمَّارٍ،‏‏‏‏ قَالَا، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنَا سُفْيَانُ بْنُ عُيَيْنَةَ،‏‏‏‏ عَنْ زِيَادِ بْنِ عِلَاقَةَ،‏‏‏‏ عَنْ أُسَامَةَ بْنِ شَرِيكٍ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ شَهِدْتُ الْأَعْرَابَ يَسْأَلُونَ النَّبِيَّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ أَعَلَيْنَا حَرَجٌ فِي كَذَا؟ أَعَلَيْنَا حَرَجٌ فِي كَذَا؟ فَقَالَ لَهُمْ:‏‏‏‏ عِبَادَ اللَّهِ،‏‏‏‏وَضَعَ اللَّهُ الْحَرَجَ إِلَّا مَنِ اقْتَرَضَ مِنْ عِرْضِ أَخِيهِ شَيْئًا،‏‏‏‏ فَذَاكَ الَّذِي حَرِجَ،‏‏‏‏ فَقَالُوا:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ،‏‏‏‏ هَلْ عَلَيْنَا جُنَاحٌ أَنْ لَا نَتَدَاوَى؟ قَالَ:‏‏‏‏ تَدَاوَوْا عِبَادَ اللَّهِ،‏‏‏‏ فَإِنَّ اللَّهَ سُبْحَانَهُ لَمْ يَضَعْ دَاءً إِلَّا وَضَعَ مَعَهُ شِفَاءً،‏‏‏‏ إِلَّا الْهَرَمَ،‏‏‏‏ قَالُوا:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ،‏‏‏‏ مَا خَيْرُ مَا أُعْطِيَ الْعَبْدُ؟ قَالَ:‏‏‏‏ خُلُقٌ حَسَنٌ.
اسامہ بن شریک (رض) کہتے ہیں کہ میں نے اعرابیوں کو نبی اکرم ﷺ سے سوال کرتے دیکھا کہ کیا فلاں معاملے میں ہم پر گناہ ہے ؟ کیا فلاں معاملے میں ہم پر گناہ ہے ؟ تو آپ ﷺ نے فرمایا : اللہ کے بندو ! ان میں سے کسی میں بھی اللہ تعالیٰ نے گناہ نہیں رکھا سوائے اس کے کہ کوئی اپنے بھائی کی عزت سے کچھ بھی کھیلے، تو دراصل یہی گناہ ہے ، انہوں نے کہا : اللہ کے رسول ! اگر ہم دوا علاج نہ کریں تو اس میں بھی گناہ ہے ؟ آپ ﷺ نے فرمایا : اللہ کے بندو ! دوا علاج کرو، اس لیے کہ اللہ تعالیٰ نے کوئی ایسا مرض نہیں بنایا جس کی شفاء اس کے ساتھ نہ بنائی ہو سوائے بڑھاپے کے ، انہوں نے عرض کیا : اللہ کے رسول ! بندے کو جو چیزیں اللہ تعالیٰ نے عطا کی ہیں ان میں سے سب بہتر چیز کیا ہے ؟ آپ ﷺ نے ارشاد فرمایا : حسن اخلاق ۔
تخریج دارالدعوہ : «تفرد بہ ابن ماجہ، (تحفة الأشراف : ١٢٧، ومصباح الزجاجة : ١٢٧) ، وقد أخرجہ : سنن ابی داود/الطب ١ (٣٨٥٥) ، سنن الترمذی/الطب ٢ (٢٠٣٨) ، مسند احمد (٤/٢٧٨) (صحیح )
It was narrated that Usamah bin Sharik said: "I saw the Bedouins asking the Prophet ﷺ 'Is there any harm in such and such, is there any harm in such and such?' He said to them: 'O slaves of Allah! Allah has only made harm in that which transgresses the honor of one's brother. That is what is sinful.' They said: 'O Messenger of Allah ﷺ Is there any sin if we do not seek treatment?' He said: 'Seek treatment, O slaves of Allah! For Allah does not create any disease but He also creates with it the cure, except for old age.' They said: 'O Messenger of Allah, what is the best thing that a person may be given?' He said: 'Good manners.": (Sahih)
Top