سنن ابنِ ماجہ - قربانی کا بیان - 3125
حدیث نمبر: 3120
حَدَّثَنَا نَصْرُ بْنُ عَلِيٍّ الْجَهْضَمِيُّ، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنِي أَبِي، ‏‏‏‏‏‏ح وحَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ بَشَّارٍ، ‏‏‏‏‏‏حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ جَعْفَرٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَا:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، ‏‏‏‏‏‏سَمِعْتُ قَتَادَةَ، ‏‏‏‏‏‏يُحَدِّثُ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ كَانَ يُضَحِّي بِكَبْشَيْنِ أَمْلَحَيْنِ أَقْرَنَيْنِ وَيُسَمِّي وَيُكَبِّرُ، ‏‏‏‏‏‏وَلَقَدْ رَأَيْتُهُ يَذْبَحُ بِيَدِهِ وَاضِعًا قَدَمَهُ عَلَى صِفَاحِهِمَا.
انس بن مالک (رض) کہتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ دو چتکبرے سینگ دار مینڈھوں کی قربانی کرتے، (ذبح کے وقت) «بسم الله» اور «الله أكبر» کہتے تھے، اور میں نے آپ کو اپنا پاؤں جانور کے پٹھوں پر رکھ کر اپنے ہاتھوں سے ذبح کرتے ہوئے دیکھا ١ ؎۔
تخریج دارالدعوہ : «صحیح البخاری/الأضاحي ٩ (٥٥٥٨) ، صحیح مسلم/الأضاحي ٣ (١٩٦٦) ، سنن النسائی/الضحایا ٢٧ (٤٤٢٠) ، (تحفة الأشراف : ١٢٥٠) ، وقد أخرجہ : سنن الترمذی/الأضاحي ٢ (١٤٩٤) ، مسند احمد (٣/٩٩، ١١٥، ١٧٠، ١٧٨، ١٨٣، ١٨٩، ٢١١، ٢١٤، ٢٢٢، ٢٥٥، ٢٥٨، ٢٦٧، ٢٧٢، ٢٧٩، ٢٨١) ، سنن الدارمی/الأضاحي ١ (١٩٨٨) (صحیح )
وضاحت : ١ ؎: «أضاحی»: «اضحیہ» کی جمع ہے اور «ضحایا» جمع ہے «ضحی ۃ » کی اور «اضحی» جمع ہے «اضحا ۃ » کی، اسی لئے دوسری عید (عید قربان) کو عیدالاضحی کہا جاتا ہے۔
It was narrated from Anas bin Malik (RA): "The Messenger of Allah ﷺ used to sacrifice two horned, black-and-white rams and he would say the Name of Allah and pronounce His greatness saw him slaughtering them with his own hand, putting his foot on their sides."
Top