مشکوٰۃ المصابیح - پینے کی چیزوں کا بیان - 4163
عن أنس قال : كان رسول الله صلى الله عليه وسلم يتنفس في الشراب ثلاثا . متفق عليه . وزاد مسلم في رواية ويقول : " إنه أروى وأبرأ وأمرأ "
حضرت انس (رض) کہتے ہیں کہ رسول کریم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) پانی پینے کے درمیان تین مرتبہ سانس لیتے تھے (بخاری و مسلم) اور مسلم نے ایک روایت میں یہ الفاظ بھی نقل کئے ہیں کہ۔۔۔۔۔ اور آپ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) فرماتے کہ اس طرح (کئی سانس میں پانی پینا اچھی طرح سیراب کرتا ہے اور پیاس کو بجھاتا ہے بدن کو صحت بخشتا ہے اور خوب ہضم ہوتا ہے اور معدہ میں بڑی آسانی کے ساتھ جاتا ہے۔ "

تشریح
" تین مرتبہ سانس لیتے تھے " یعنی آپ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) پانی تین سانس میں پیتے تھے، حضرت انس (رض) نے یہ بات اکثر کے اعتبار سے بیان کی ہے کہ آپ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) اکثر و بیشتر اسی طرح پانی پیتے تھے اور بعض روایتوں میں آنحضرت (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کے بارے میں دو سانس میں بھی پینے کا ذکر آیا ہے بہرحال تین یا دو سانس میں پینے کا طریقہ یہ تھا کہ آپ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) ہر مرتبہ برتن کو منہ سے جدا کرلیتے تھے۔
Top