مشکوٰۃ المصابیح - قضاء روزہ کا بیان - 2038
روزہ نہ رکھنے یا روزہ توڑ ڈالنے کی صورت میں تین حکم ہیں۔ (١) بھول چوک میں روزہ افطار کرلینے کی صورت میں نہ کفارہ واجب ہے اور نہ قضاء۔ (٢) بغیر کسی عذر کے قصدا روزہ افطار کرلینے کی صورت میں کفارہ واجب ہوتا ہے۔ (٣) کسی عذر مثلا مرض یا سفر کی بناء پر روزہ نہ رکھنے یا افطار کرلینے کی صورت میں قضا واجب ہوتی ہے چناچہ اس باب کے تحت قضا روزہ کے احکام و آداب بیان کئے جائیں گے اور صحیح یہ ہے کہ یہاں قضا روزہ سے مراد رمضان کے قضا روزے ہیں۔
Top