مسند امام احمد - ایک شیخ کی روایت - 16012
قَالَ حَدَّثَنَا أَبُو النَّضْرِ قَالَ حَدَّثَنَا الْمَسْعُودِيُّ عَنْ مُهَاجِرٍ أَبِي الْحَسَنِ عَنْ شَيْخٍ أَدْرَكَ النَّبِيَّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ خَرَجْتُ مَعَ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ فِي سَفَرٍ فَمَرَّ بِرَجُلٍ يَقْرَأُ قُلْ يَا أَيُّهَا الْكَافِرُونَ قَالَ أَمَّا هَذَا فَقَدْ بَرِئَ مِنْ الشِّرْكِ قَالَ وَإِذَا آخَرُ يَقْرَأُ قُلْ هُوَ اللَّهُ أَحَدٌ فَقَالَ النَّبِيُّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ بِهَا وَجَبَتْ لَهُ الْجَنَّةُ
ایک شیخ سے جنہوں نے نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کو پایا ہے مروی ہے کہ ایک مرتبہ میں نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کے ساتھ سفر پر نکلا تو نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا گذر ایک آدمی پر ہوا جو سورت کافرون کی تلاوت کر رہا تھا، نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا یہ تو شرک سے بری ہوگیا، پھر دوسرے آدمی کو دیکھا وہ سورت اخلاص کی تلاوت کر رہا تھا، نبی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) نے فرمایا اس کی برکت سے اس کے لئے جنت واجب ہوگئی۔
Top