سنن النسائی - بارش طلبی کی نماز سے متعلقہ احادیث - 1509
أَخْبَرَنَا قُتَيْبَةُ بْنُ سَعِيدٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ مَالِكٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ شَرِيكِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ أَبِي نَمِرٍ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ جَاءَ رَجُلٌ إِلَى رَسُولِ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ، ‏‏‏‏‏‏هَلَكَتِ الْمَوَاشِي وَانْقَطَعَتِ السُّبُلُ فَادْعُ اللَّهَ عَزَّ وَجَلَّ، ‏‏‏‏‏‏فَدَعَا رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ فَمُطِرْنَا مِنَ الْجُمُعَةِ إِلَى الْجُمُعَةِ، ‏‏‏‏‏‏فَجَاءَ رَجُلٌ إِلَى رَسُولِ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ، ‏‏‏‏‏‏تَهَدَّمَتِ الْبُيُوتُ وَانْقَطَعَتِ السُّبُلُ وَهَلَكَتِ الْمَوَاشِي، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ اللَّهُمَّ عَلَى رُءُوسِ الْجِبَالِ وَالْآكَامِ وَبُطُونِ الْأَوْدِيَةِ وَمَنَابِتِ الشَّجَرِ،‏‏‏‏ فَانْجَابَتْ عَنِ الْمَدِينَةِ انْجِيَابَ الثَّوْبِ.
انس بن مالک (رض) کہتے ہیں کہ ایک آدمی رسول اللہ کے پاس آیا، اور اس نے عرض کیا : اللہ کے رسول ! چوپائے ہلاک ہوگئے، (اور پانی نہ ہونے سے) راستے (سفر) ٹھپ ہوگئے، آپ اللہ تعالیٰ سے دعا کیجئیے۔ تو رسول اللہ نے دعا کی، تو جمعہ سے لے کر دوسرے جمعہ تک ہم پر بارش ہوتی رہی، تو پھر ایک آدمی رسول اللہ کے پاس آیا، اور اس نے عرض کیا : اللہ کے رسول ! گھر منہدم ہوگئے، راستے (سیلاب کی وجہ سے) کٹ گئے، اور جانور مرگئے، تو آپ نے دعا کی : «اللہم على رءوس الجبال والآکام وبطون الأودية ومنابت الشجر» اے اللہ ! پہاڑوں کی چوٹیوں، ٹیلوں، نالوں اور درختوں پر برسا تو اسی وقت بادل مدینہ سے اس طرح چھٹ گئے جیسے کپڑا (اپنے پہننے والے سے اتار دینے پر الگ ہوجاتا ہے) ۔
تخریج دارالدعوہ : صحیح البخاری/الاستسقاء ٦ (١٠١٣) ، ٧ (١٠١٤) ، ٩ (١٠١٦) ، ١٠ (١٠١٧) ، ١٢ (١٠١٩) ، صحیح مسلم/الإستسقاء ٢ (٨٩٧) ، سنن ابی داود/الصلاة ٢٦٠ (١١٧٥) ، (تحفة الأشراف : ٩٠٦) ، موطا امام مالک/الإستسقاء ٢ (٣) ، مسند احمد ٣/٤ ١٠، ١٨٢، ١٩٤، ٢٤٥، ٢٦١، ٢٧١ ویأتی عند المؤلف بأرقام : ١٥١٦، ١٥١٩ (صحیح )
قال الشيخ الألباني : حسن صحيح
صحيح وضعيف سنن النسائي الألباني : حديث نمبر 1504
It was narrated that 'Anas bin Malik (RA) said: "A man came to the Messenger of Allah (صلی اللہ علیہ وسلم) and said: 'O Messenger of Allah, the livestock have died and the routes have been cut off; pray to Allah (SWT), the Mighty and Sublime.' So the Messenger of Allah (صلی اللہ علیہ وسلم) prayed to Allah (SWT) and it rained from that Friday until the next. Then a man came to the Messenger of Allah (صلی اللہ علیہ وسلم) and said: 'The houses have been destroyed, the routes have been cut off and the livestock have died.' He said: 'O Allah, on the tops of the mountains and hills, in the bottom of the valleys and where the trees grow.' So (the rain) was lifted from Al-Madinah like a garment being removed."
Top